بھارت اور امریکا کے درمیان جوہری توانائی کے متعلق چھ مزید معاہدے

امریکہ اور بھارت کے درمیان جوہری پرسیسنگ کے معاہدے پر دستخط ہوگئے ہیں۔ گذشتہ روز واشنگٹن میں امریکہ کے جوہری کمیشن کے وائس چیئرمین گراس ڈیلے اور امریکہ میں متعین بھارتی سفیر میراشنکر نے جوہری پروسیسنگ کے 6 معاہدوں پر دستخط کئے ہیں۔ ذرائع کے مطابق یہ جوہری معاہدہ استعمال شدہ جوہری ایندھن کے دوبارہ استعمال سے متعلق ہے اس سے پہلے بھارت استعمال شدہ جوہری ایندھن چوری سے استعمال کرتا تھا، اب باقاعدہ امریکی حکام نے بھارت امریکہ نیوکلیئر معاہدے کے تحت ایک اور جوہری معاہدے کی روشنی میں استعمال شدہ جوہری ایندھن کو دوبارہ استعمال کا جائز طریقہ طے ہوگیاہے۔ ذرائع کے مطابق امریکہ بھارت کو مزید جوہری مواد بھی فراہم کرنے کے راستے تلاش کررہاہے لیکن بھارتی اپوزیشن کی وجہ سے امریکہ خاموش ہے امریکی حکام بھارتی اپوزیشن کے ساتھ بھارت امریکہ نیوکلیئر معاہدے کے حوالے سے بات چیت میں لگے ہوئے ہیں۔ بھارت امریکہ نیوکلیئرمعاہدے میں بھارتی کمیونسٹ گروپس حائل ہیں جبکہ بی جے پی 50 فیصد رکاوٹ ڈال رہی ہے۔

Advertisements

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: